Home / تازہ ترین / پاک بھارت کی ایٹمی جنگ کی صورت میں دنیا بھوکی مرجائے گی، امریکی ماہرین

پاک بھارت کی ایٹمی جنگ کی صورت میں دنیا بھوکی مرجائے گی، امریکی ماہرین

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) ایک محتاط مطالعے کے بعد امریکی ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ اگر پاک بھارت ایٹمی جنگ ہوئی تو اس سے نہ صرف برصغیر کے کروڑوں لوگ ہلاک ہوں گے بلکہ دنیا بھر میں خشک سالی اور قحط کا بھی خطرہ ہے جو عالمی آبادی کے بہت بڑے حصے کو موت کے گھاٹ اتار دے گا۔امریکی جریدے نے کہاہے کہ جنوبی ایشیا کی دو جوہری طاقتیں مسئلہ کشمیر پرایک دوسرے کے مدمقابل ہیں لیکن عالمی دنیا نے مسلسل خاموشی اختیار کررکھی ہے جس کی وجہ سے دونوں ممالک کے مابین کشیدگی روز بروز بڑھتی جارہی ہے۔ بدقسمتی سے بعض عناصر موجود تنا کی کیفیت میں جنگ کی باتیں کرکے حالات کو مزید مخدوش بنارہے ہیں اور لوگوں میں ہیجانی کیفیت پیدا کرنے کا سبب بھی بن رہے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی جریدے سائنس ایڈوانس نے اپنی رپورٹ میں کہاکہ وزیراعظم عمران خان متعدد مرتبہ دنیا کو باور کراچکے ہیں کہ اگر اس نے فوری طور پر مداخلت نہ کی اور بھارت کی جنونی انتہا پسند مودی سرکار کو مظلوم کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے ریاستی جبر و تشدد سے نہ روکا تو صورتحال کسی کے بھی قابو میں نہیں رہے گی۔ انہوں نے واضح کیا کہ اگر دونوں ممالک کے درمیان جنگ کی کیفیت پیدا ہوئی تو اس کے اثرات پوری دنیا پہ مرتب ہوں گے۔امریکی جریدے سائنس ایڈوانس نے وزیراعظم عمران خان کے بیان کی تصدیق کرتے ہوئے عالمی دنیا کو بتایا کہ اگر خدانخواستہ دونوں پڑوسی ممالک کے درمیان جوہری جنگ چھڑی تو فورا ہی دس کروڑ لوگ مارے جائیں گے اور جنگ کے بعد بھی لاکھوں افراد کے مارے جانے کا سلسلہ جاری رہے گا۔رپورٹ کے مطابق جوہری جنگ کے دوران جو نقصان ہوگا اس سے تو کافی افراد واقف ہیں لیکن اس کے بعد یہ ہوگا کہ زمین پر پہنچنے والی سورج کی روشنی کافی کم ہوجائے گی جس کی وجہ سے بارش میں کمی آئے گی، کھیتی باڑی تباہ ہو جائے گی، پیداوار میں خطرناک حد تک کمی واقع ہوگی اور تمام اثرات براہ راست کرہ ارض پہ پڑیں گے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے