Home / پاکستان / بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ,چیئرمین نیپرا نے شہر قائد میں بجلی بندش کا نوٹس

بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ,چیئرمین نیپرا نے شہر قائد میں بجلی بندش کا نوٹس

اسلام آباد (بیورو رپورٹ)کراچی میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا معاملہ،چیئرمین نیپرا نے شہر قائد میں بجلی بندش کا نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ حکام کو معاملے کی تحقیقات کی ہدایت کر دی۔ منگل کو چیئر مین نیپرا نے کہاکہ معلوم کیا جائے کراچی میں غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کیوں ہو رہی ہے، ہو سکتا ہے فرنس آئل نہ ہونے کی وجہ سے کراچی میں لوڈشیڈنگ ہو، کراچی بھی اسی ملک کا حصہ ہے لاوارث نہیں چھوڑینگے، توصیف ایچ فاروقی نے کہاکہ بجلی بندش کی جو بھی وجوہات ہوں گی میڈیا اور عوام کے سامنے رکھیں گے۔

نیپرا نے کے الیکٹرک کی بجلی مہنگی کرنے کی درخواست موخر کر دی۔چیئر مین نیپرا نے کہاکہ حکومت کی جانب سے بجلی کی قیمت میں اضافہ نہ کرنے کی ہدایات ہیں، 30 جون تک کابینہ نے بجلی مہنگی نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ کچھ روز قبل بجلی تقسیم کارکمپنیاں بھی ایسی ہی درخواست لے کر آئی تھیں،کراچی بھی اسی ملک کا حصہ ہے، کے الیکٹرک کے ساتھ ایک جیسا سلوک کریں گے،حکام کے الیکٹرک کے مطابق سماعت کر لیں بے شک فیصلہ ابھی جاری نہ کریں۔

چیئر مین نیپرا توصیف فاروقی نے کہاکہ ہم نے باقی ڈسکوز کے ساتھ بھی یہی کیا تھا۔ درخواست میں کے الیکٹرک نے بجلی کی قیمت میں 1 روپیہ 60 پیسے فی یونٹ اضافہ مانگا تھا۔یاد رہے کہ کے الیکٹرک کی جنوری فیول ایڈجسٹمنٹ کے تحت فی یونٹ بجلی 65پیسے مہنگی کرنے کی درخواست تھی،فروری کیلئے 97پیسے فی یونٹ اور مارچ کیلئے 48پیسے بھی یونٹ بجلی مہنگی کرنے کی درخواست تھی،اپریل کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کے تحت فی یونٹ بجلی 62پیسے سستی کرنے کی درخواست تھی،اکتوبر سے دسمبر 2019کی سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ گیارہ پیسے فی یونٹ کمی کی درخواست تھی،جنوری سے مارچ 2020کی سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ درخواست مین کے الیکٹرک نے 23 پیسے فی یونٹ اضافہ مانگا تھا

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے