Home / پاکستان / حکومت کا نئے سال کا تحفہ، پیٹرولیم مصنوعات مہنگی

حکومت کا نئے سال کا تحفہ، پیٹرولیم مصنوعات مہنگی

اسلام آباد(بیور و رپورٹ) حکومت نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمت میں اضافہ کر دیا،عوام کے ریلیف کو مدنظر رکھتے ہوئے وزیرِ اعظم عمران خان نے اوگرا کی سفارشات کے برعکس پٹرولیم مصنوعات میں کم سے کم اضافہ کرنے کی منظوری دی۔ اوگرا کی جانب سے پٹرول کی قیمت میں 10.68 روپے فی لیٹر جبکہ ڈیزل کی قیمت میں 8.37 روپے فی لیٹر اضافے کی سفارش کی گئی تھی۔ عوام کو ممکنہ حد تک ریلیف فراہم کرنے کی حکومتی ترجیحات کو

مد نظر رکھتے ہوئے پٹرول کی قیمت میں محض 2.31 روپے جبکہ ڈیزل کی قیمت میں 1.80 روپے فی لیٹر اضافہ منظور کیا گیا ہے،اسی طرح اوگرا کی جانب سے کیروسین (مٹی کاتیل) میں 10.92 روپے فی لیٹر جبکہ لائٹ ڈیزل میں 14.87 روپے اضافہ تجویز کیا گیا تھا۔ اس کے برعکس کیروسین کی قیمت میں 3.36 روپے جبکہ لائٹ ڈیزل کی قیمت مین محض 3.95 روپے اضافہ کیا گیا ہے۔ ایل پی جی کی فی کلوگرام قیمت میں 15روپے کا اضافہ ہوگیاہے، جس کے بعدفی کلوقیمت132روپے سے بڑھ کر 147 روپے فی کلو ہوگئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق بجلی اور پیٹرولیم مصنوعات کے بعد حکومت کی جانب سے عوام کے لیے 2021 کا ایک اور تحفہ آگیا ہے، اور ایل پی جی کی قیمت میں ایک ریکارڈ اضافہ کیا گیاہے، جس کے تحت فی کلو ایل پی جی 15 روپے مہنگی ہوگئی ہے۔ایل پی جی ایسوسی ایشن کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ جنوری 2021 سے ایل پی جی کی قیمت 132 روپے فی کلو کے جگہ 147 فی کلو ہوگی، گھریلو سلنڈر کی قیمت میں بھی 180 روپے کا اضافہ کیا گیا ہے، جس کے بعد گھریلو سلنڈر 1553 کی جگہ 1733 میں دستیاب ہوگا، جب کہ کمرشل سلنڈر کی قیمت میں بھی 692 روپے اضافہ کردیا گیا ہے۔

چیئرمین ایل پی جی ایسوسی ایشن عرفان کھوکھرنے بتایاکہ بین الاقوامی مارکیٹ میں ایل پی جی کی فی میٹرک ٹن قیمت میں 79 ڈالر اضافہ ہوا ہے، جس کے بعد ایل پی جی کی قیمت 457 ڈالر سے بڑھ کر 536 ڈالر پر پہنچ گئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ ایل پی جی پر لیوی سمیت تمام ٹیکسز کا خاتمہ نہ کیا گیا تو 15 جنوری سے خیبر سے کراچی تک گیس کی سپلائی بند کر دیں گے۔
پیٹرول مہنگا

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے